Urdu Love Stories

میری شادی کا سن کر وہ سب کچھ چھوڑ کر دبئی سے لاہور آ گیا وہ آتے ہی میرے پاؤں میں بیٹھ گیا اور کہنے لگا مجھے معاف کردو لیکن میں تمہارے بغیر نہیں رہ سکتا پلیز مجھے مت چھوڑو تم یہ سب کچھ چھوڑ کر میرے ساتھ چلو میرا یقین کرو سب کچھ ٹھیک کر دوں گا میں اسے دیکھ کر مسلسل روئے جا رہی تھی کہ وہ پہلے ہی سمجھ جاتا تو آج ہم دونوں اتنی تکلیف میں نہ ہوتے میں نے اسے بتایا بھی تھا کہ میرے بابا بیمار رہتے ہیں حالات میرے بس سے باہر ہوتے جا رہے ہیں

پر اس وقت اسے لگتا تھا کہ یہ سب میں اسے خود ہی جذباتی کر کہہ رہی ہیں میں نے اس سے کہا میرا سارا گھر سجا پڑا ہے کل میری بارات ہے میں کیسے اپنے خاندان کی عزت کو مٹی میں ملا کر تمہارے ساتھ بھاگ جاؤ مجھے معاف کر دینا مجھ سے یہ سب نہیں ہوگا اب تو بہت دیر ہو چکی ہے میں تمہارے آگے ہاتھ جوڑتی ہوں تم پلیز یہاں سے چلے جاؤ اور اس نے مجھ سے کہا میں اگر واپس جاؤں گا تو تمہیں اپنے ساتھ لے کر جاؤں گا ورنہ میں تمہاری قسم کھاتا ہوں اس شہر سے کبھی نہیں جاؤں گا پانچ سال بعد اس کے ایک دوست سے پتہ چلا کہ وہ تین سال پہلے اس شہر میں مر گیا تھا وہ بالکل پاگل ہو گیا تھا اور اس نے خودکشی کرلی تھی میں یہ سب سن کر میں کس اذیت میں ہوں کوئی نہیں سمجھ سکتا وہ کہتے ہیں دوسرے کی قدر اس کے بعد ہوتی ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *